نکھرا نکھرا ہے رنگ پھولوں کا
اب کے اچھا ہے رنگ پھولوں کا

جیسے عارض پہ تیرے لالی ہے
بالکل ایسا ہے رنگ پھولوں کا

کچھ نہ کچھ بات تو ہوئی جو
آج میلا ہے رنگ پھولوں کا

تیرے چہرے پہ بھی چمک سی ہے
جب سے نکھرا ہے رنگ پھولوں کا

لال، پیلا، سفید جز اس کے
اور کیسا ہے رنگ پھولوں کا

باغ میں جب سے تجھ کو دیکھا ہے
سہما سہما ہے رنگ پھولوں کا

لوگ تیری مثال دیتے ہیں
یعنی اچھا ہے رنگ پھولوں کا