سوال نمبر 1: اس کہانی کا خلاصہ مختصراً اپنے الفاظ میں تحریر کیجیے۔

آلودگی سے مراد قدرتی ماحول میں ایسے اجزاء شامل کرنا جس کی وجہ سے ماحول میں منفی اور نا خوشگوار تبدیلیاں واقع ہوں۔ آلودگی کی بنیادی وجہ انسانی مداخلت ہوتی ہے۔آلودگی عام طور پر صنعتی کیمیائی مادوں کی وجہ سے ہوتی ہے۔ آلودگی کی اقسام میں صوتی آلودگی، آبی آلودگی، فضائی آلودگی، برقی آلودگی، زمینی آلودگی اور بحری آلودگی شامل ہیں۔ یہ تمام آلودگیاں بہت جان لیوا ہوتی ہیں۔

یہ ساری آلودگیاں ایک دوسرے سے مربوط ہیں اور ایک دوسرے پر اثر انداز بھی ہوتی ہیں۔ آلودگی کی کے سبب دوسری خرابیاں اور بیماریاں بھی شروع ہو جاتی ہیں یہ سب کچھ ایک مسلسل عمل کی طرح ہوتا ہے۔ آلودگی کی وجہ سے ایسی بیماریاں پیدا ہوتی چلی جاتی ہیں اور انسان کو احساس تک نہیں ہوتا اور جب اس عمل کو روکنا ناممکن ہو جاتا ہے یا پھر اس کا اہل اتنا مہنگا ہوتا ہے کہ سوائے صبر کرنے اور کوئی راستہ باقی نہیں رہتا۔

موجودہ دور ترقی کا دور ہے۔ اس دور میں ہر قسم کی آلودگی سے فوری طور پر بچا نہیں جا سکتا لیکن اسے ضرور کم کیا جاسکتا ہے۔پیڑ پودوں کو لگایا جائے اور اس کے علاوہ کارخانوں سے نکلنے والے بے کار اور غلیظ مادہ کو کیمیائی طریقے سے ٹھکانے لگایا جائے۔ زیادہ سے زیادہ موٹر گاڑیوں میں lpg یاcng کے استعمال کو یقینی بنائے جائے۔ شوروغل سے جہاں تک ممکن ہو بچا جائے۔ ایسے اقدامات کے بعد ہم کافی حد تک آلودگی سے اپنا دامن بچا سکتے ہیں۔

اس کہانی کے سوالات کے جوابات کے لیے یہاں کلک کریں۔

سوال نمبر2 : نیچے لکھے گئے لفظوں کی جمع بنائیے۔

واحدجمع
خواہشخواہشات
اختیاراختیارات
ترقیترقیات
ممکنممکنات
سوالسوالات

سوال نمبر 3: نیچے لکھے ہوئے ادھورے جملوں کو مکمل کیجئے۔

  • آپ کے دائیں بائیں موٹر گاڑیاں ﴿دھواں اگلتی دوڑ رہی ہیں۔﴾
  • کہیں مشینوں کی آواز کانوں کو ﴿جھنجھوڑ رہی ہے۔﴾
  • ہر طرف مشینوں کی ﴿بھرمار ہے۔﴾
  • ہوا، پانی اور خوراک ہر جاندار کی بنیادی ضرورت ہے لیکن یہ سب ﴿آلودگی کا شکار ہیں۔﴾
  • کیمیاوی کھاد کے ساتھ ساتھ کیڑے مار دواؤں کا﴿ استعمال کیا جاتا ہے۔
  • ایک طرف انسانی ترقی کا﴿ ایک بڑھتا ہوا سیلاب ہے﴾ دوسری طرف ﴿اس کی تباہ کاریاں ہیں۔
  • کارخانوں سے نکلنے والے گلیز ماڈلوں کو کیمیاوی طریقے سے ﴿ٹھکانے لگایا جائے۔﴾