تعارف

نوجوان پاکستانی شاعروں میں کاشف بٹ اردو کے ایک مشہور شاعر ہیں۔ وہ ایک کہانی مصنف ، نقاد اور ٹی وی میزبان بھی ہیں۔ کاشف بٹ ۳۱ جنوری ۱۹۸۵ کو پنجاب کے ایک کشمیری قبیلے میں پیدا ہوئے تھے۔ ان کے والد شاہد اقبال بٹ کا تعلق وزیرآباد سے ہے لیکن وہ خیبرپختونخوا کے ہزارہ ڈویژن میں حکومت پاکستان کی خدمات انجام دے رہے ہیں لہذا پورا خاندان ہزارہ ڈویژن میں آباد ہے۔ کاشف بٹ نے اپنے تعلیمی کیریئر کا آغاز ایف جی پی پبلک ہائی اسکول پی او ایف حویلین کینٹ سے ۱۹۹۰ میں کیا تھا اور ہزارہ یونیورسٹی مانسہرہ سے پوسٹ گریجویشن (ایم ایس سی آرگینک کیمسٹری) مکمل کیا تھا۔ اپریل ، ۲۰۱۵ میں انہوں نے جنوبی کوریا میں اعلی تعلیم کے لئے پاکستان چھوڑ دیا۔

پیشہ وارانہ زندگی

تعلیمی کورسز کی تکمیل کے بعد ، ماہ مئی ۲۰۰۷ میں انہیں "دیوان سلمان فائبر لمیٹڈ” میں کوالٹی کنٹرول انجینئر کے عہدے پر مقرر کیا گیا جو پاکستان میں سب سے بڑا پیٹرو کیمیکل پلانٹ ہے۔ سال ۲۰۱۰ میں ، انہوں نے قرشی انڈسٹریز (پرائیوٹ) لمیٹڈ میں شمولیت اختیار کی جو پاکستان کی ایک قابلِ ذکر دواؤں اور کھانے کی مصنوعات کی صنعت بھی ہے۔ ۲۰۱۳ میں انہوں نے حیدری بیوریجز پرائیوٹ لمیٹڈ (پیپیسکو باٹلنگ کمپنی) میں منیجر فوڈ سیفٹی اینڈ کوالٹی کنٹرول کی حیثیت سے شمولیت اختیار کی۔ انہوں نے بہت ہی کم وقت میں اپنے بہت ہی متاثر کن طرز عمل اور جانکاری کی وجہ سے انتظامیہ ، ساتھیوں اور ماتحت افراد میں بہت مشہور مقام حاصل کیا۔ بعد میں انہوں نے پاک فوڈز راولپنڈی میں بطور چیف آپریٹنگ آفیسر شمولیت اختیار کی۔ گروپ کے سربراہ ہونے کے ناطے ان کا کردار قابل ذکر تھا۔

ادبی و دینی خدمات

بحیثیت شاعر ، کاشف بٹ نے اپنے کیریئر کا آغاز سن ۱۹۹۸ میں کیا تھا ، جب وہ آٹھویں جماعت کے طالب علم تھے ، تو ان کی ابتدائی نظمیں روزانہ اور ہفتہ وار مقالوں میں شائع ہوتی تھیں۔ سال ۲۰۰۴ میں انہوں نے ہزارہ ڈویژن کی ایک مشہور ادبی تنظیم قلعہ کاروان میں شمولیت اختیار کی۔ اسی سال انہوں نے کہانی مصنف اور کالم نگار کی حیثیت سے اپنے کیریئر کا آغاز کیا۔ بعد میں انھیں مارچ ۲۰۰۶ میں مذکورہ تنظیم کے لئے پریس سکریٹری کے طور پر منتخب کیا گیا تھا جبکہ نومبر ۲۰۰۹ میں وہ کالام کاروان کے لئے سینئر وائس صدر منتخب ہوئے تھے۔

نومبر ۲۰۰۵ سے ، کاشف بٹ فہم القرآن فاؤنڈیشن ٹرسٹ کے جنرل سکریٹری کی حیثیت سے کام کر رہے ہیں ، جو قرآن کریم کی سائنسی ، فکری اور روحانی تفہیم کا ادارہ ہے۔ کاشف بٹ ایبٹ آباد کے ایک آنے والے چینل "شمل ٹی وی روز نیوز” کی میزبانی کر رہے ہیں۔

شہرت

کاشف بٹ کی تحریریں ڈیلی ایکسپریس ، روزنامہ جنگ ، روزنامہ نوائے وقت ، روزنامہ اوصاف ، روزنامہ جناح ، روزنامہ خبریں ، روزنامہ شملہ ، روزنامہ ندا الخالق ، ہفتہ وار وطن ، ہفتہ وار ایف آئی آر ، ہفتہ وار منظر وغیرہ میں شائع ہوئیں۔ ادبی رسالے ادیب دوست ، نارنگِ خیالی ، ادیب لطیف ، شیر او سکھان ، دوار کنارے ، کھٹ رنگ ، کائنات ، سر سبز ، بیاض اور دیگر میں آپ کی تصانیف شامل ہیں۔

شعری مجموعہ

ان کی اردو شاعری کا ایک مجموعہ "خدا بانٹ لیا ہے” کے عنوان سے شائع ہوا ہے۔ کتاب کو اردو ادب میں ایک اہم اضافہ کے طور پر زیرِ بحث لایا جارہا ہے اور اپنے انوکھے انداز اور موضوع کی وجہ سے قارئین کی طرف سے بڑی توجہ حاصل کی جارہی ہے۔

Advertisements