محاورےمعانیجملے
ڈٹ جاناجم کر کھڑا ہو جانازندگی کی مصیبتوں کے سامنے ڈٹ جانا ہی انسان کا کام ہے۔
ڈنکے کی چوٹ کہنااعلانیہ کہنامیں یہ بات ڈنکے کی چوٹ پر کہہ سکتا ہوں۔
ڈنکا بجنابول بالا ہونااس کی قابلیت کا تو تمام شہر میں ڈنکا بج رہا ہے۔
ڈھلتی پھرتی چھاؤں ہونازوال کی حالت ہونادولت تو ڈھلتی پھرتی چھاؤں ہے اس کا کیا اعتبار ہے۔
ڈکار جانابے ایمان ہو کر ہضم کرجانااس نے غریب کی امانت ڈکار جانے میں ذرا بھی تامل نہ کیا۔

‘ر’ کے محاورے

محاورےمعانیجملے
رائی کا پہاڑ بنانابات کو بڑھا کر پیش کرناکیوں رائی کا پہاڑ بنا رہے ہو؟ بات اتنی تو نہ تھی۔
رنگ رلیاں مناناخوشی مناناباپ کے مرنے کے بعد تو وہ رنگ رلیاں منا رہا ہے۔
رال ٹپکنالالچ ہوناحلوائی کی دکان پر تازہ رس گولے دیکھ کر اس کی رال ٹپک پڑی۔
ریت کی دیوار کھڑی کرنابے فائدہ کام کرنایہ سکیم تو ریت کی دیوار ہے۔
رسی کا سانپ بناناجھوٹ کو سچ بناناوکیل تو رسی کا سانپ بناتے ہیں۔
رات آنکھوں میں کاٹنامصیبت میں جاگنامیری حالت ان دنوں کیا پوچھتے ہو، رات آنکھوں میں کٹ رہی ہے۔
رات سولی پر کاٹناتکلیف اٹھانااس نے وہ رات سولی پر کاٹی تھی۔
رونگٹے کھڑے ہوناڈر جانامجنوں گورکھپوری کی کہانی سن کر میرے رونگٹے کھڑے ہو گئے۔
رنگ فق ہوناڈر جاناشیر کو اپنی طرف آتے دیکھ کر اس کا رنگ فق ہو گیا۔
رنگ جماناسکہ بٹھانامشاعرہ میں فیض نے اپنا رنگ جمادیا۔
Advertisements