مرکب اضافی کی قسمیں

مرکب اضافی کی سات قسمیں ہیں۔

(1) اضافت تملیکی

جس مرکب میں مملوک کی اضافت مالک کی طرف یا مالک کی اضافت مملوک کی طرف ہو اسے اضافت تملیکی کہتے ہیں۔
مثلا:- موہن کی گاۓ۔


(2) اضافت ظرفی

جس مرکب میں ظرف اور مظروف کے درمیان اضافت ہو اس سے اضافت ظرفی کہتے ہیں۔
مثلا:- گھر کی مرغی،
رات کی ٹھنڈک وغیرہ

(3) اضافت تخصیصی

جس میں مضاف اپنے مضاف الیہ کے سبب خاص ہو جائے۔
مثلا:- میرا لڑکا۔

(4) اضافت توضیحی

جس میں مضاف الیہ مضاف کی وضاحت کرتا ہے۔
مثلاً:- رمضان کا مہینہ۔
گلستان کی کتاب۔
اضافت توضیحی اور تخصیصی میں فرق یہ ہے کہ:
توضیحی کے مضاف الیہ اور مضاف کو بطرز مبتدا اور خبر استعمال کرکے بامعنی بتا سکتے ہیں۔

(5) اضافت بیانی

جس میں مضاف الیہ مضاف کا مادہ ہو۔
مثلاً:-شیشے کا گلاس.

(6) اضافت تشبیہی

جس میں مضاف الیہ مضاف کا مشابہ ہوتا ہے۔
مثلاً:-زلف کا سانپ۔
بارش کے موتی۔
بھون کی کمان۔

(7) اضافت استعارہ

جس میں مضاف کو مضاف الیہ کا جز یا حصہ تصور کیا جاتا ہے۔مگر درحقیقت وہ حصہ یا جز نہیں ہوتا۔
مثلاً:-عقل کے ناخن۔
قدرت کے ہاتھ۔

Close