Advertisement

تحیة المسجد

اس نماز سے مقصود مسجد کی تعظیم ہے جو در حقیقت خدا ہی کی تعظیم ہے کیونکہ مکان کی تعظیم صاحب مکان کی تعظیم کے خیال سے ہوتی ہے۔ ارشاد فرمایا رسول خدا صلی اللہ علیہ وسلم نے کہ جب تم میں سے کوئی شخص مسجد میں داخل ہو تو چاہیے کہ بیٹھنے سے پہلے دو رکعت نماز نفل پڑھ لے۔
(بخاری و مسلم)

Advertisement

اگر مسجد میں ایسے وقت داخل ہو کہ اس وقت نماز پڑھنا مکروہ ہے۔ مثلاً زوال کا وقت ہو تو بغیر نماز پڑھے ہی بیٹھ جائے، اس وقت تحیة الوضو و تحىة المسجد یا اور کوئی نفل نماز نہ پڑھے۔

Advertisement
Advertisement

Advertisement
Advertisement