بچپن پر ایک مضمون

بچپن ہر انسان کے لئے زندگی کا ایک بہترین وقت ہوتا ہے۔ اس کے نام سے ہی اس کا مطلب سمجھ آ جاتا ہے۔ بچپن بے گناہی کا زمانہ ہوتا ہے، میٹھی میٹھی شرارتوں سے بھرا ہوتا ہے اور زندگی کی سب سے بہترین خوشیوں سے بھرا ہوا ہوتا ہے۔ اگر ہم بچپن کی تعریف شروع کر دیں تو لفظ بچپن بہت چھوٹا پڑ جائےگا۔ ہاں اس بات کو کوئی نظر انداز نہیں کر سکتا کہ بچپن ہی انسان کی زندگی کا سب سے خوشگوار وقت ہوتا ہے۔

میرے مطابق بچپن زندگی کا بہت اہم حصہ ہوتا ہے۔ جب ہمیں مستقبل کے مقاصد کے بارے میں کوئی فکر نہیں ہوتی ہے۔ جیسے کل مجھے کیا کرنا پڑے گا؟ اگر میں کل صبح سویرے نہیں اٹھوں گا تو کیا ہوگا؟ بچپن ہی وہ وقت ہوتا ہے جب ہم معاشرتی مسائل سے بےخبر ہوتے ہیں۔ اس طرح کی دیگر بہت سی ذمہ داریوں سے اور تمام دنیا کی حقیقی رکاوٹوں سے آزاد ہوتے ہیں۔ زندگی کے اس دور میں ہمیں اس بارے میں کوئی فکر نہیں ہوتی ہے کہ آگے کیا ہوگا۔ جیسے کہ ہم آج بہت سی چیزوں کے بارے میں فکر مند ہوتے ہیں۔ بچپن میں ہم ہمیشہ لاپرواہ کی طرح برتاؤ کرتے ہیں۔ ہمیں تو پریشان بھی نہیں کیا جاتا ہے کہ آگے کیا ہونے والا ہے۔

بچپن کو دیکھنے کا ایک اور پہلو یہ ہے کہ ہم نے اپنے کنبہ داروں، دوستوں، بھائی، بہنوں کے ساتھ وقت کس طرح گزارا۔ تہواروں کے دوران ہر بچے کا جو مزہ ہوتا تھا وہ اس لئے کہ اپنے کنبے کے ساتھ ٹور پر جاتے تھے اور پھر تہواروں کے دوران طرح طرح کی مختلف قسم کی مٹھائیاں اور پکوان کھاتے تھے۔ جب بھی ہم پرانے دنوں کے بارے میں سوچتے ہیں تو یہ سب یادیں ہمیشہ ہمیں زندہ دل بناتی ہیں۔ یہ واقعتاً بچپن ہی ہے جس کے ذریعہ آپ ہمیشہ اپنے آپ کو کنبہ کے چاروں طرف سے گھیرے ہوئے خوشگوار یادوں کو حاصل کر سکتے ہیں۔

اس کے برعکس، کچھ چھوٹے غریب بچوں کے لئے ان کا بچپن اتنا خوشگوار نہیں ہوتا۔ ممکن ہے کہ انہوں نے اپنے بچپن میں زیادہ سخت وقت گزارا ہو۔ کیونکہ ان کی قسمت کی وجہ سے وہ غریب گھر میں پیدا ہوئے ہیں جسکی وجہ سے انہیں وہ ساری سہولتیں نہیں مل پاتیں جو عام بچوں کو ملتی ہے۔ اُن بچوں کی پیدائش میں بھی انکے والدین کو بڑی پریشانی کا سامنا کرنا پڑتا ہے اور انکی پیدائش کے بعد بھی وہ اپنا بچپن صحیح سے نہیں بسر کر پاتے ہیں۔ لیکن پھر بھی بچپن کی وہ یادیں بھی انکے لیے بہت انمول ہوتی ہیں کیونکہ بچپن ایسا زمانہ ہوتا ہے کہ کوئی بھی شخص اُسے نہ تو بھول پاتا ہے اور نہ ہی بھولنا چاہتا ہے۔ میں ہمیشہ مانتا ہوں کہ یہ سب اس بات پر منحصر ہے کہ ہم زندگی کو کس طرح دیکھتے ہیں۔ یہ سچ ہے کہ بچپن کے دوران کوئی بھی ان سمت میں سوچنے کے قابل نہیں ہوتا ہے۔

یہ کہنا بہت ضروری ہے کہ بچپن انسان کی آئندہ زندگی میں بہت اہم کردار ادا کرتا ہے۔ اور بچپن کی یادیں یا تو خوشیوں سے بھری ہوئی ہوتی ہیں یا غموں سے لیکن میں ہمیشہ یہی دعا کرونگی کہ بچپن کی یادیں ہر بچے کے لئے ہمیشہ خوش کن رہیں۔ کسی نے کہا ہے کہ ہر بچہ زمین پر خدا کی رحمت ہوتا ہے لہذا اسے جتنا ہو سکے پیار اور محبت اور شفقت کے ساتھ پالنا چاہئے۔ بچپن زندگی کا ایک اہم حصہ ہے اور ہر ایک کو یہ یاد رکھنا چاہیے۔ اسلیے ہمیں اپنے بچوں کا بچپن ایسا خوشگوار بنانا چاہیے کہ بڑے ہوکر وہ اُن حسین یادوں کو جب بھی یاد کریں تو کبھی انہیں اُن یادوں کی وجہ سے افسوس یا دکھ نہ ہو۔